این ٹی ٹی کمیونی کیشنز ٹرانس پیسفک سب میرین کیبل میں 100 جی بی پی ایس ڈیجیٹل کوہیرنٹ ٹیکنالوجی لائے گا

ٹوکیو، 17 جولائی 2013ء/کیوڈو جے بی این-ایشیانیٹ/ ایشیانیٹ پاکستان —

– پی سی -1 کیبل سسٹم کی گنجائش 2.5 سے زیادہ بڑھا کر 8.4 ٹی بی پی ایس تک بڑھائے گئی

این ٹی ٹی کمیونی کیشنز کارپوریشن (این ٹی ٹی کام) نے 17 جولائی کو امریکہ اور جاپان کو ملانے والے ٹرانس پیسفک سب میرین کیبل سسٹم میں دنیا کے پہلے 100 جی بی پی ایس ڈیجیٹل کوہیرنٹ ٹیکنالوجی کے نفاذ کا اعلان کیا ہے، جو کمپنی کےپی سی-1 سسٹم کی ڈیزائن گنجائش کو 2.5 گنا سے زیادہ بڑھاتے ہوئے 8.4 ٹیرابٹس فی سیکنڈ تک پہنچا دے گا، جو فوری طور پر موثر ہوگا۔

اسمارٹ فونز اور ٹیبلٹس کے استعمال، میوزک/وڈیو ڈاؤنلوڈنگ، کلاؤڈ کمپیٹونگ اور سوشل نیٹ ورکنگ جیسی سروسزکے بڑھتے ہوئے استعمال کے باعث ڈیٹاٹریفک بہت تیزی سے آگے بڑھا ہے۔ اس کے جواب میں این ٹی ٹی کام اکتوبر 2011ء میں کمپنی کے امریکہ-جاپان روٹ پر ڈیجیٹل کوہیرنٹ ٹیکنالوجی کے استعمال کے لیے 100 جی بی پی ایس کی آپٹیکل ٹرانسمیشن کا مظاہرہ کیا۔ لیکن تیزی سے بڑھتی ہوئی آپٹیکل نیٹ ورک گنجائش کے لیے طریقے کی حیثیت سے ٹیکنالوجی کی کشش کے باوجود ابتدائی طور پر طویل فاصلے پر مستحکم 100 جی بی پی ایس کمیونی کیشن فراہم کرنا مشکل تھا۔ پی سی 1 کے نیٹ ورک ڈھانچے کو آپٹیکل طور پر آپٹمائز کرکے این ٹی ٹی کام نے اب ٹرانس پیسفک روٹ پر 100 جی بی پی ایس کوہیرنٹ ٹیکنالوجی کے پہلے تجارتی نفاذ کو حاصل کر لیا ہے، جس میں حکمت عملی کے تحت آپٹیکل رپیٹرز اور بہتر آپٹیکل فائبر لے آؤٹ شامل ہے۔

2014ءکے اختتام پر 100 جی بی پی ایس آپٹیکل ٹرانسمیشن این ٹی ٹی کام کے ایشیا سب میرین کیبل ایکسپریس (ASE) پر بھی نافذ کردی جائے گی، جو صنعت کی معروف کم لچک کے لیے مختصر ترین ممکنہ راستے کے ذریعے ایشیا کے بڑے شہروں کو ملاتی ہے۔

– پی سی-1 کیبل سسٹم

پی سی-1 آپٹیکل سب میرین کیبل، مختصر ترین ٹرانس پیسفک رابطہ، کو این ٹی ٹی کام گروپ کی کمپنی پی سی لینڈنگ گروپ چلاتی ہے۔

کل لمبائی: 21,000 کلومیٹر

ہیئت: رنگ-ٹوپولوجی نیٹ ورک جاپان اور امریکہ میں لینڈنگ اسٹیشنوں کے ساتھ

لینڈنگ اسٹیشنز: آجیگوارا (ایباراکی پری فیکچر، ٹوکیو کے قریب)؛ شیما (مائی پری فیکچر، اوساکا اور ناگویا کے قریب)؛ ہاربر پوائنٹ، واشنگٹن اور گروور بیچ، کیلیفورنیا

– ڈیجیٹل کوہیرنٹ

ڈیجیٹل کوہیرنٹ جدید ترین ٹرانسمیشن ٹیکنالوجی ہے جو کثیر السطحی ماڈیولیشن کے ذریعے اسپیکٹرل موثریت کو بہتر بناتی ہے، جیسا کہ فیز ماڈیولین اور پولرائزیشن ملٹی پلیکسنگ۔ یہ کوہیرنٹ ڈٹیکشن اور ڈیجیٹل سگنل پروسیسنگ کے ملاپ کے ذریعے ریسیور کی حساسیت کو بڑی حد تک بہتر بناتی ہے۔

این ٹی ٹی کمیونی کیشنز کارپوریشن کے بارے میں

این ٹی ٹی کمیونی کیشنز کاروباری اداروں کے انفارمیشن اور کمیونی کیشنز ٹیکنالوجی (آئی سی ٹی) ماحول کو بہتر بنانے کے لیے مشاورت، آرکیٹیکچر، سیکورٹی اور کلاؤڈ سروسز فراہم کرتا ہے۔ ان پیشکشوں کو ادارے کے عالمی بنیادی ڈھانچے، بشمول معروف عالمی ٹیئر-1 آئی پی نیٹ ورک، آرک اسٹارک یونیورسل ون (ٹ   م) وی پی این نیٹ ورک کی مدد حاصل ہے جو 160 ممالک/خطوں اور 140 سے زیادہ محفوظ ڈیٹا سینٹرز تک رسائی رکھتا ہے۔ این ٹی ٹی کمیونی کیشنز کے حل این ٹی ٹی گروپ کمپنیوں کے عالمی وسائل کوسہارا دیتے ہیں جن میں ڈائیمینشن ڈیٹا، این ٹی ٹی ڈوکومو اور این ٹی ٹی ڈیٹا شامل ہیں۔

www.ntt.com/index-e.html | www.twitter.com/nttcom | www.facebook.com/nttcomtv | http://www.linkedin.com/company/ntt-communications

 ذریعہ: این ٹی ٹی کمیونی کیشنز کارپوریشن