تعلیم و آجرین کے سب سے بڑے سروے کے بعد کیمبرج دنیا کی نمبر ایک یونیورسٹی قرار

AsiaNet 46161

لندن، 5 ستمبر / پی آر نیوز وائر – ایشیا نیٹ /

–        8 ویں سالانہ کیو ایس عالمی یونیورسٹی درجہ بندی (ر) نے چھ مظاہروں بشمول اب تک کئے جانے والے سب سے بڑے سروے 33,000 عالمی تعلیمی ادارے اور 16,000 گریجویٹ آجرین کے سروے کی بنیاد پر 300 بہترین یونیورسٹیوں کا اعلان کر دیا

–        2011ء میں نیا: شائع ہونے والے نتائج بین الاقو امی معلمی اخراجات تقابل کے ساتھ اب http://www.topuniversities.com پر دستیاب ہیں

اہم نکات:

–        عالمی: یونیورسٹی آف کیمبرج نے ہارورڈ سے آگے رہتے ہوئے اپنے اول مقام کو برقرار رکھا جبکہ ایم آئی ٹی نے ییل  اور آکسفورڈ سے آگے بڑھ کر تیسری  پوزیشن حاصل کرلی؛ 38 ممالک میں 300 بہترین

–        ٹیکنالوجی سے متعلق تحقیق  کے لیے حکومتی و نجی  مالی امداد  سے روایتی جامع یونیورسٹیوں کی برتری میں کمی آئی ہے۔ 100 بہترین اداروں  کی اوسط عمر  2010ء کے بعد سے سات سال تک گھٹ گئی ہے، جو بالخصوص ایشیا میں نئے ماہر اداروں کے نمود کو ظاہر کرتا ہے

–        ریاستہائے متحدہ امریکا / کینیڈا:  ریاستہائے متحدہ امریکا نے 20 بہترین میں 13 اور 300 بہترین میں سے 70 مقامات حاصل کئے؛ میک گل (17) اور ٹورنٹو (23) دونوں اوپر آئے تاہم 19 میں سے 14 کینیڈین یونیورسٹیاں 2010ء سے نیچے قرار پائے

–        برطانیہ / آئرلینڈ: آکسفورڈ (5) اور امپیریل (6) نے یو سی ایل (7) کو پیچھے چھوڑ دیا، 10 بہترین میں چار برطانوی یونیورسٹیوں نے جگہ بنائی؛ ٹی سی ڈی (65) اور یو سی ڈی (134) دونوں پیچھے چلی گئیں

–        براعظمی  یورپ: ای ٹی ایچ زیوریخ نے (18) ای این ایس پیرس (33)، ای پی ایف ایل (35) اور پیرس ٹیک (36) کی پیشوائی کی؛  عمدہ اقدامات کے باوجود کوئی جرمن یونیورسٹی 50 بہترین میں شامل  نہیں ہوسکی

–        ایشیا: ایچ کے یو (22) ٹوکیو (25)، این یو ایس (28) اور کیوٹو (32) سے برتر رہی؛ بھارت: آئی آئی ٹی بی 200 بہترین میں سے باہر ہوگئی؛ چین: ٹسنگھاؤ (47) 50 بہترین میں پیکنگ (46) کے ساتھ شامل رہی

–        آسٹریلیا: اے این یو (26) اور میلبورن (31) جن کے درمیان فرق 18 سے کم ہو کر پانچ رہ گیا ، سڈنی (38) سے آگے بڑھ گئیں؛ جی 8 تمام 100 بہترین مقام حاصل کیے

–        مشرق وسطی: کنگ سعود یونیورسٹی (200) نے پہلی  بار 200 بہترین میں جگہ بنائی

–        لاطینی امریکا: یو ایس پی (169) نے پہلی بار 200 بہترین میں جگہ بنائی؛ مجموعی طور پر 300 بہترین میں پانچ یونیورسٹیاں (برازیل، چلی اور ارجنٹائن)

کیو ایس تحقیق کے سربراہ بین سووٹر :”کیمبرج اور ہارورڈ کے درمیان فرق بہت کم ہے لیکن کیمبرج کے بہترین  طالب علم / فیکلٹی کے تناسب نے میزان کے جھکاؤ میں مدد دی۔ انفرادی توجہ اوکسبرج درسی نظام کی بنیادی دلکشیوں میں سے ایک  ہے۔”

کیو ایس منیجنگ ڈائریکٹر نوزیو کویک کویریلی: “چونکہ طالب علموں کو عام طور پر ان کی تعلیم سے قبل پہلے سے کہیں زیادہ چارج  کیا جار ہا ہے اس لئے کیو ایس پہلی بار درجہ بندی میں شامل یونیورسٹیوں کی تقابلی کورس فیس بھی شائع کر رہا ہے۔ کیو ایس  یونیورسٹی کی فوقیت اور ساکھ جو جانچنے کے لیے گریجویٹ آجرین کے نظریات  کو ایک اہم عنصر کے طور پر شامل کرنے کے لئے بھی منفرد ہے۔  گریجویٹس کی ملازمت کرنے کی قابلیت  عالمی – معیار کی یونیورسٹیوں کا ایک اہم مقصد ہوتا ہے اور کیو ایس درجہ بندی  میں عالمی سطح پر بھرتی ہونے والوں کی باخبر رائے بھی ہے۔”

http://www.youtube.com/watch?v=nonfPjh8dPk

ذریعہ: کیو ایس کویک کویریلی سائمنڈز www.topuniversities.com

رابطہ برائے ذرائع ابلاغ:

مزید معلومات کے لیے رابطہ: سیمونا بزوزیرو، simona@qs.com، +44(0)7880-620-856؛ وکی چیو، vickie@qs.com، +44(0)2072847292۔