(آئی ایس سی)2 نے ایشیا-پیسفک انفارمیشن سیکورٹی لیڈرشپ اچیومنٹس (ISLA) پروگرام کے اعزاز یافتگان کا اعلان کر دیا

Asianet 45317

ہانگ کانگ، 7 جولائی 2011ء/پی آرنیوزوائر-ایشیا-ایشیانیٹ/

آئی ایس ایل اے کی پانچویں سالگرہ کے موقع پر 26 جولائی کو جکارتہ، انڈونیشیا میں اعزاز یافتگان کے ساتھ ایک پرشکوہ عشائیہ

دنیا کے سب سے بڑے غیر منافع بخش انفارمیشن سیکورٹی پروفیشنل ادارے اور سی آئی ایس ایس پی (ر) کے مالک (آئی ایس سی)2 (ر) نے آج اپنے پانچویں سالانہ ایشیا پیسفک انفارمیشن سیکورٹی لیڈرشپ اچیومنٹس (آئی ایس ایل اے) پروگرام کے اعزاز یافتگان کا اعلان کر دیا ہے۔ (آئی ایس سی)2 جکارتہ،  انڈونیشیا  میں 26 جولائی کو ایک پرشکوہ عشائیہ میں اعزاز یافتگان اور کمیونٹی سروس اسٹار کو حاصل کرنے والے افراد کے ساتھ چار ممتاز افراد کے منصوبوں کا اعلان کرے گا۔

مہمان خصوصی جمہوریہ انڈونیشیا کی وزارت مواصلات و انفارمیشن ٹیکنالوجی کے ڈائریکٹر جنرل برائے انفارمیٹکس ایپلی کیشنز ڈاکٹر انجینئر آشون ساسونگ کو   ایم ایس سی کے ساتھ (آئی ایس سی)2 کی اعلی شخصیات کے ساتھ ایشیا پیسفک خطے میں باصلاحیت انفارمیشن سیکورٹی رہنماؤں کی صلاحیتوں اور  کامیابیوں کا جشن منائیں گے۔ آئی ایس ایل اے کے ذریعے (آئی ایس سی)2 ایشیا پیسفک خطے میں انتہائی قابلیت کی حامل اور اخلاقیاتی افراد  کی تعمیر کے لیے انفارمیشن سیکورٹی رہنماؤں کی وابستگی کے جاری عمل کو ا علانیہ تسلیم کرتا ہے۔  (آئی ایس سی)2 کے عالمی ایوارڈز پروگرام کے  ذریعے  آئی ایس ایل کا مقصد انفارمیشن سیکورٹی کو بہتر بنانے والے منصوبے، پروگرام یا ارادے میں قائدانہ کردار کا مظاہرہ کر نےوالے افراد کار کی بہتری میں اہم حصہ ڈالنا ہے ۔

پیشہ ور ماہرین کو تین علیحدہ زمروں میں نامزد کیا گیا ہے: انفارمیشن سیکورٹی کے پیشہ ور، مینیجر پروفیشنل  برائے انفارمیشن سیکورٹی پراجیکٹ  اور سینئر ماہر برائے  انفارمیشن سیکورٹی  ۔ نامزدگی کے لیے پیشہ ورانہ سند کی ضرورت نہیں تھی۔  2011ء آئی ایس ایل اے کے اعزاز یافتگان درج ذیل ہیں:

انفارمیشن سیکورٹی کے پیشہ ور کے  زمرے میں:

1۔ محترم امین شریف، سی ای ایچ، سی آئی ایس اے، سی آئی ایس ایس پی، سربراہ انفارمیشن سیکورٹی، فوجی فرٹیلائزر کمپنی لمیٹڈ،  پاکستان

2۔ محترم کن چونگ چان، سی آئی ایس ایس پی، سی آئی ایس اے، نائب صدر، انفارمیشن رسک مینجمنٹ، ایشیا، جے پی مورگن چیز بینک، این اے، سنگاپور

3۔ محترم سوراچائی چات چلرم پن، سی ایس ایس ایل پی، ایس ایس سی پی، آئی آر سی اے آئی ایس ایم ایس ایس: آئی ایس او 27001، کمپلائس، پروسس اینڈ رسک مینجمنٹ آفیسر، پی ٹی ٹی آئی سی ٹی سلوشنز،  تھائی لینڈ

4۔ جناب مان کیونگ، رولینڈ چیونگ، سی آئی ایس ایس پی، ایم سی ایس ای، مشیر، ہانگ کانگ پروڈکٹوٹی کونسل،  ہانگ کانگ

5۔ جناب جونگ-اوہ ہر، سی آئی ایس ایس پی، سی آئی ایس اے، اے پی ای سی انجینئر/ای ایم ایف-آئی آر پی ای، پروجیکٹ مینیجر برائے آئی ٹی سیکورٹی سسٹمز، آہن لیب انکارپوریٹڈ، جنوبی کوریا

6۔ محترمہ نور آئدہ ادریس، سی آئی ایس ایس پی، سی آئی ایس ایم، سی آر آئی ایس سی، سینئر تجزیہ کار، سیکورٹی مینجمنٹ بیسٹ پریکٹسز ڈپارٹمنٹ، سائبرسیکورٹی ملائیشیا،  ملائیشیا

7۔ پروفیسر رچرڈس ایکو اندرجت، پی ایچ ڈی، چیئر آئی ڈی-ایس آئی آر ٹی آئی آئی (انڈونیشیا سیکورٹی انسیڈنٹ رسپانس ٹیم آن انٹرنیٹ انفرااسٹرکچر)، انڈونیشیا

8۔ محترم کیتی ساک جیراواناکول، سیکورٹی+، سینئر انجینئر، نیشنل الیکٹرانکس اینڈ کمپیوٹر ٹیکنالوجی سینٹر (این ای سی ٹی ای سی) ،  تھائی لینڈ

9۔ جناب محمد نظام قاسم، جی اے ڈبلیو این، جی پی ای این، جی ڈبلیو اے پی ٹی، سینئر تجزیہ کار سائبر سیفٹی، آؤٹ ریچ ڈپارٹمنٹ، سائبرسیکورٹی ملائیشیا، ملائیشیا

10۔ جناب محمد زبیر خان، سی آئی ایس اے، سی آئی ایس ایم، چیف ایگزیکٹو آفیسر، ٹرانکولس لمیٹڈ،  پاکستان

11۔ محترمہ منگ ہوئی لیو، سیکشن مینیجر، انسٹیٹیوٹ آف انفارمیشن انڈسٹری (III)، تائیوان

12۔ محترمہ نور عزوی پہری، سربراہ، سیکورٹی اشورنس ڈپارٹمنٹ، سائبرسیکورٹی ملائیشیا،  ملائیشیا

13۔ جناب آشون پرنکوشا، ایم بی اے، آئی ایس او 27001 ایل اے، سینئر سیکورٹی کنسلٹنٹ، گینپت ٹیکنالوجی لیبز پرائیوٹ لمیٹڈ،  بھارت

14۔ جناب فلپ کی لن سائی، ایم ایس سی، سی آئی ایس اے، بی سی ایم پی، پرنسپل کنسلٹنٹ، پروفیسو کنسلٹنگ پرائیوٹ لمیٹڈ، سنگاپور

15۔ پروفیسر زونگ-چین وو، پی ایچ ڈی، پروفیسر، ڈپارٹمنٹ آف انفارمیشن مینجمنٹ، نیشنل تائیوان یونیورسٹی آف سائنس اینڈ ٹیکنالوجی (این ٹی یو ایس ٹی)،  تائیوان

مینیجر پروفیشنل برائے انفارمیشن سیکورٹی پراجیکٹ کے زمرے میں:

1۔ جناب محمود عبدالرحمن،  سی سی این اے، سی سی این پی، جی پی ای این (گولڈ)، مینیجر (اسپیشلسٹ)، میل ویئر ریسرچ سینٹر، مائی سی ای آر ٹی ڈپارٹمنٹ، سائبرسیکورٹی ملائیشیا،  ملائیشیا

2۔ جناب کاہیانا احمد جیادی، سینئر ماہر برائے وزیر سیاست و سیکورٹی، وزارت مواصلات و انفارمیشن ٹیکنالوجی،   انڈونیشیا

3۔ محترمہ سویونگ چوئی، نائب صدر، میڈیا گروپ انفو دی،  جنوبی کوریا

4۔ جناب ایزرمان یوسان، ایم ایس سی، سربراہ آئی سی ٹی ریسرچ اینڈ ہیومن ریسورسز ڈیولپمنٹ، انڈونیشیا

5۔ لیفٹیننٹ کموڈور چیا وون چی (ریٹائرڈ)، ایم ایس سی، سی بی سی پی، سی ای ایچ، سربراہ، انفوسیکورٹی پروفیشنل ڈیولپمنٹ ڈپارٹمنٹ، سائبرسیکورٹی ملائیشیا،  ملائیشیا

6۔ جناب راج کمار کنہی رامن، آئی ایس او/آئی ای سی27001 لیڈ آڈیٹر، اے بی سی پی، مینیجر، ٹریننگ اینڈ اسکلز ڈیولپمنٹ، انٹرنیشنل ملٹی لیٹرل پارٹنرشپ اگینسٹ سائبر تھریٹس (IMPACT)، ملائیشیا

7۔ جناب محمد زبری عادل طالب، ای این سی ای، جی سی ایف اے، سربراہ، ڈیجیٹل فورینسکس ڈپارٹمنٹ، سائبرسیکورٹی ملائیشیا،  ملائیشیا

8۔ جناب ہنری پنگ-شو تنگ، سی آئی او، ایسٹرن ہوم شاپنگ اینڈ لیژر کمپنی لمیٹڈ،  تائیوان

9۔ جناب چی-وین وو، ڈائریکٹر، گورنمنٹ انفارمیشن اینڈ کمیونی کیشن سیکورٹی ورکنگ گروپ، نیشنل انفارمیشن اینڈ کمیونی کیشن سیکورٹی ٹاسک فورس (این آئی سی ایس ٹی)، ایگزیکٹو یوان،  تائیوان

سینئر انفارمیشن سیکورٹی پروفیشنل کے زمرے میں:

1۔ جناب تھامس کوریان امباتو، سی آر آئی ایس سی، انفارمیشن سیکورٹی آفیسر، ڈاکسٹریم انڈیا ٹیکنالوجیز پرائیوٹ لمیٹڈ ،  بھارت

2۔ پروفیسر کوئی چیرو ہیاشی، پی ایچ ڈی، صدر و پروفیسر، انسٹیٹیوٹ آف انفارمیشن سیکورٹی،  جاپان

3۔ جناب چی کیونگ (ایلن) ہو، سی آئی ایس ایس پی، سی آئی ایس اے، ایم سی ایس ای۔ پروگرام کمیٹی ممبر، پروفیشنل انفارمیشن سیکورٹی ایسوسی ایشن،  ہانگ کانگ

4۔ چیونگ-ینگ (سی آئی) ہوانگ، سی آئی ایس ایس پی-آئی ایس ایس اے پی، آئی ایس ایس ایم پی، سینئر ٹیکنیکل مینیجر ایسر ای-انیبلنگ ڈیٹا سینٹر، ایسر انکارپوریٹڈ،  تائیوان

5۔ جناب عاصم جاکھر، بانی، نل اوپن سیکورٹی کمیونٹی،  بھارت

6۔ جناب انیش کمار سری واستو، سی آئی ایس ایس پی، سی آر آئی ایس سی، سی آئی ایس اے، سروس ایریا لیڈر، انفارمیشن سیکورٹی اینڈ پرائیویسی سروسز (جی بی ایس گلوبل ڈلیوری)، آئی بی ایم انڈیا پرائیوٹ لمیٹڈ،  بھارت

7۔ جناب ہوگن کوسندی لم، سی آئی ایس ایس پی-آئی ایس ایس اے پی، ایس ایس سی پی، ڈائریکٹر، پی ٹی یونی پرو نوانسا انڈونیشیا،  انڈونیشیا

8۔ جناب کیونگ-سو اوہ، سی ای او، لوٹ ڈیٹا کمیونی کیشن کمینی،  جنوبی کوریا،

9۔ جناب لیونارڈ اونگ، سی آئی ایس ایس پی، سی آئی ایس ایم، سی پی پی ، مینیجر، سیکورٹی سروسز، نوکیا سیمنز نیٹ ورک،  سنگاپور

10۔ جناب توشی یوکی راکومن، سی آئی ایس ایس پیج، مینیجر، این ای سی لرننگ،  لمیٹڈ جاپان

11۔ جناب پروین شرما، آئی ایس او 27001 لیڈ آڈیٹر، سی آئی ایس او، یونین بینک آف انڈیا،  بھارت

12۔ پروفیسر محمد شیر، پی ایچ ڈی، سربراہ ڈپارٹمنٹ آف کمپیوٹر سائنس، بین الاقوامی اسلامی یونیورسٹی،  پاکستان

13۔ جناب انوج سنگھ، ڈائریکٹر، گلوبل رسپانس سینٹر، انٹرنیشنل ملٹی لیٹرل پارٹنرشپ اگینسٹ سائبر تھریٹس (IMPACT)، ملائیشیا

14۔ جناب سیسل سو چی مینگ، سی آئی ایس ایس پی، سی آئی ایس اے، سی آئی ایس ایم، ڈائریکٹر، ٹیکنالوجی ایڈوائزری، گرانٹ تھارنٹن ٹیکنالوجی ایڈوائزری پرائیوٹ لمیٹڈ،  سنگاپور

15۔ ڈاکٹر انجینئر سروونو سوتکنو، سی آئی ایس ایس پی، سی آئی ایس اے، سی آئی ایس ایم، ایسوسی ایٹ پروفیسر، اسکول آف الیکٹریکل انجینئرنگ اینڈ انفارمیٹکس، انسٹیٹیوٹ ٹیکنالوجی باڈونگ (آئی ٹی بی)،  انڈونیشیا

16۔ محترمہ ینگ ین، سی آئی ایس ایس پی، سی آئی ایس اے، اسسٹنٹ پروفیسر،نائب ڈائریکٹر برائے LISS (لیب آف انفارمیشن سیکورٹی سروسز)، شنگھائی  جیوتونگ یونیورسٹی،  چین

آئی ایس ایل اے 2011ء نامزدگی نظر ثانی کمیٹی کے بارے میں مزید تفصیلات کے لیے ملاحظہ کیجیے https://www.isc2.org/InnerPage.aspx?id=6120۔

(آئی ایس سی)2 کے ایگزیکٹو ڈائریکٹر ڈبلیو ہارڈ ٹمپٹن، سی آئی ایس ایس پی-آئی ایس ایس ای پی، سی اے پی، سی آئی ایس اے نے کہا کہ “آئی ایس ایل اے نے پانچ سال قبل اپنے آغاز کے بعد سے اب تک علاقائی صنعت میں ایک اعلی درجے کی شہرت حاصل کرنے کے لیے طویل سفر کیا ہے۔ ہم ان ماہرین کو نوازنے کا سلسلہ جاری رکھیں گے جنہوں نے انفارمیشن سیکورٹی کے بنیادی ڈھانچے کے اہم حصوں کو محفوظ بنانے کے لیے اپنا وقت وقف کیا ہے اور جو ہر روز بہتری اور جدت طرازی کے لیے کوشش کر رہے ہیں۔ اس منصوبے کی توسیع ہر سال نامزدگی کی تعداد میں مستقل بڑھتا ہوا اضافہ اور نامزد کیے گئے ماہرین کی پہنچ سے ظاہر ہے۔ (آئی ایس سی)2 حکومت انڈونیشیا کی مدد پر شکر گزار ہونے کے ساتھ ساتھ مہمان خصوصی ڈاکٹر انجینئرن آشون ساسونگو کا بھی مشکور ہے۔ ہماری نظریں جکارتہ میں اعزاز یافتگان اور دیگر معزز مہمانوں کے ساتھ جشن منانے پر مرکوز ہیں۔”

(آئی ایس سی)2 عہدیداران آئی ایس ایل اے کے اعزاز یافتگان، نمائشی اعزاز یافتگان اور کمیونٹی سروس اسٹار کو 26 جولائی کو شنگری-لا ہوٹل جکارتہ، انڈونیشیا میں آئی ایس ایل اے پرشکوہ عشائیے میں نوازے گا۔ اس کے ساتھ ساتھ (آئی ایس سی)2 سیکورٹی لیڈرشپ ایونٹ – سیکورایشیا@جکارتہ نمائش اور کانفرنس- 26 سے 27 جولائی کو جکارتہ کے شنگری-لا ہوٹل میں منعقد ہوگا۔

سیکورایشیا@جکارتہ کے بارے میں مزید معلومات اور رجسٹریشن کے لیے www.informationsecurityasia.com ملاحظہ کیجیے۔ مزید معلومات کے لیے چارمین لام، اسسٹنٹ مارکیٹ ڈیولپمنٹ مینیجر سے clam@isc2.org یا +852 2850 6957 پر رابطہ کریں۔ شرکت کے خواہشمند ذرائع ابلاغ کے نمائندے کٹی چونگ، پی آر نمائندہ برائے (آئی ایس سی)2 ایشیا پیسفک سے kchung@isc2.org پر رابطہ کریں۔

(آئی ایس سی)2 (ر) کے بارے میں

(آئی ایس سی)2 مستند انفارمیشن سیکورٹی ماہرین کی دنیا بھر میں سب سے بڑی غیر منافع بخش ممبر باڈی ہے، جس کے 135 ممالک میں تقریبا 80 ہزار اراکین ہیں۔ عالمی سطح پر گولڈ اسٹینڈرڈ کے طور پر تسلیم شدہ  (آئی ایس سی)2 سرٹیفائیڈ انفارمیشن سسٹمز سیکورٹی پروفیشنل (سی آئی ایس ایس پی(ر)) اور متعلقہ مواد جاری کرتا ہے، اور ساتھ ساتھ قابل امیدواروں کے لیے  سرٹیفائیڈ سیکور سافٹ ویئر لائف سائیکل پروفیشنل (سی ایس ایس ایل پی (ر))، سرٹیفائیڈ آتھرائزیشن پروفیشنل (سی اے پی (ر))، اور سسٹمز سیکورٹی سرٹیفائیڈ پریکٹیشنر (ایس ایس سی پی (ر)) کریڈنشل بھی جاری کرتا ہے۔ (آئی ایس سی)2 سرٹیفکیشنز افراد کار کے تعین اور تصدیق کے عالمی معیار ANSI/ISO/IEC اسٹینڈرڈ 17024کے کڑے معیارات پر پورا اترنے والے اولین انفارمیشن ٹیکنالوجی کریڈنشلز میں شامل ہے۔ (آئی ایس سی)2 انفارمیشن سیکورٹی کے موضوعات کے جامع خلاصے سی بی کے (ر) پر مبنی تعلیمی پروگرامز اور خدمات بھی پیش کرتا ہے۔ مزید معلومات http://www.isc2.org پر دستیاب ہیں۔

(کاپی رائٹ) 2011ء (آئی ایس سی)2 انکارپوریٹڈ، (آئی ایس سی)2، سی آئی ایس ایس پی، آئی ایس ایس اے پی، آئی ایس ایس ایم پی، آئی ایس ایس ای پی، اور سی ایس ایس ایل پی، ایس ایس سی پی اور سی بی کے (آئی ایس سی)2 انکارپوریٹڈ کے رجسٹرڈ مارکس ہیں۔

(آئی ایس سی) 2 کو ٹویٹر (http://www.twitter.com/isc2) پر یا یوٹیوب (http://www.youtube.com/isc2tv) فالو کریں۔

روابط برائے ذرائع ابلاغ:

کٹی چونگ

(آئی ایس سی)2 ایشیا-پیسفک

ٹیلی فون: +852-3520-4001

ای میل: kchung@isc2.org

ذریعہ: (آئی ایس سی)2