پیرے-ژوئے کی 200 وی سالگرہ کا جشن جاری، اپرنس میں دنیا کے معروف شراب ماہرین نے بڑے جاموں میں بیلے ایپوک کا پہلا عمودی ذائقہ چکھا

AsiaNet 45163

اپرنے، فرانس، 21 جون/پی آرنیوزوائر-ایشیانیٹ/

200 ویں سالگرہ کے جشن کے حصے کے طور پر پیرے-ژوئے نے 16 اور 17 جون کو دنیا کے معروف ماہرین شراب کا خصوصی خیرمقدم کیا کہ وہ اپنی اعلی درجے کی شراب بیلے ایپوک کا زیادہ محفلانہ انداز میں لطف اٹھائیں: یعنی بڑے جام میں۔

ملٹی میڈیا نیوز ریلیز دیکھنے کے لیے کلک کیجیے:

http://multivu.prnewswire.com/mnr/prne/champagneperrierjouet/50513/

پیرے-ژوئے کی تاریخی 2009ء ٹیسٹنگ کے بعد جس میں دنیا کی قدیم ترین شامپین پیرے-ژوئے 1825 شراب  شامل تھی، شیف دی کیوی ہیروے دے شانز 1975ء تک سے تعلق رکھنے والی ادارے کی 9 شاندار قدیم شرابوں کے محفلانہ ذائقے چکھنے کے لیے ان کے زمین دوز شراب خانے کے مختلف حصوں کا دورہ کرنا چاہ رہے تھے، پیرے-ژوئے نے اسی سن میں شراب کے بڑے جاموں میں قدیم شراب پیش کرنے کا سلسلہ متعارف کروایا تھا۔

ہروے دے شانز نے تفصیلات پیش کرتے ہوئے کہا کہ “بڑے جاموں میں شامپین پیش کرنا جشن منانے کی روایتی علامت ہے اور ہماری 200 ویں سالگرہ وہ بہترین موقع تھا کہ یہ زبردست شرابیں بڑی بوتلوں میں کس طرح بتدریج تیار ہوتی ہیں۔ بڑے جام ایک غیر معمولی لیکن روایتی بوتلوں کے مقابلے میں ذرا مختلف تجربہ ہیں، کم دباؤ کے ساتھ پرانی شراب کی تلچھٹ زیادہ شدید اور عمدہ معطر شراب دیتی ہے۔”

پیرے-ژوئے کی دو صد سالہ کو افسانوی 1911ء کی قدیم شراب کو بڑے جام میں پیش کرنے کے بعد، مہمانوں * کو بیلے ایپوک کے 1998ء، 1996ء، 1995ء، 1990ء، 1990ء، 1989ء، 1985ء، 1982ء، 1978ء اور 1975ء کے بڑے جام پیش کیے گئے۔ ان شرابوں کا امتزاج یکساں رہا، جو پیرے-ژوئے کے معیاری انداز کے عین مطابق تھا، جو گراں کرو آ کرامین اینڈ اویزے کی جانب سے 50 فیصد شاردونے، میلی، ورزی، ورزینے کی جانب سے 45 فیصد پنو نوئر اور ڈزی کی جانب سے 5 فیصد پنو مینوئر سے تیار کیا گیا۔

برطانوی ماہر شراب سرینا سٹکلف ایم ڈبلیو نے تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ “میں ہواؤں میں اڑ رہی تھی، مجھے پختہ شرابیں پسند ہیں اور بڑے جاموں میں پیش کردہ یہ چند اپنے سامنے زبردست مستقبل رکھتی ہیں۔” جبکہ فرانسیسی شراب مصنف مائیکل بیٹانے کہتے ہیں کہ ” بڑے جاموں کے حوالے سے دلچسپ بات یہ ہے کہ ان میں شراب بہتر انداز میں پیش ہوتی ہے، کیونکہ اس میں حواس پر کاربونک گیسیں کم حاوی ہوتی ہیں۔ کوئی شخص زیادہ ‘الکوحلیت’ اور زیادہ ہمواری حاصل کرتا ہے: میں تو خود شراب کو دریافت کرنے پر بہت خوش ہوا۔”

1985ء اور 1975ء کی پرانی شرابیں کو خصوصا سراہا گیا؛ جن میں بیلے ایپوک 1985ء کے ایک بڑے جام کو ایک ماہر کی جانب سے “ہیجان خیز اور آگے طویل عمر رکھنے والا” قرار دیا اور 1975ء کی قدیم شراب کی “قطعی تاثر اور بیلے ایپوک کی کامیابی؛ ملائم، ہم آہنگ اور ایک ناقابل یقین شیرینی کی حامل” کے طور پر تعریف کی۔

دو روزہ نجی تقریب کے دوران مہمانوں کو عمدہ شامپین-جوڑی شاندار عشائیہ بھی دیا گیا، جسے معروف فرانسیسی باورچی ژاں-لوئی نامیکوس ** اور ماسوں بیلے ایپوک کے باورچی مائیکل دوبئے نے ترتیب دیا تھا، جنہوں نے مل کر 1911ء پیرے-ژوئے صد سالہ فہرست طعام کو از سر نو تخلیق کیا تاکہ پیرے – ژوئے کے نئے جواہرات کی رینج کو مکمل کیا جا سکے۔ اس میں بڑی بوتل میں ممتاز بیلے ایپوک 1998ء ، اور رواں سال مارچ میں پیرس میں پہلی بار منظر عام پر لائی گئی دنیا کی پہلی “”زندہ جاوید شامپین” *** ہارٹ پیرے-ژوئے بائی-سنتنری میں کووی دے گراں گارد شامل تھیں۔

چکھی گئی تمام شامپین آندرے بیورے اور ہیروے دی شانز کی تیار کردہ \تھیں، جو پیرے-ژوئے کی 200 سالہ تاریخ میں بالترتیب چھٹے اور ساتویں شراب خانے کے مالک ہیں اور ان کی کامیابیاں پیرے-ژوئے کے معیاری انداز کے ساتھ قدیم شرابوں کی انفرادی خصوصیات کے تنوع کو بہترین انداز میں متوازن کرتا ہے، جو گزشتہ دو صدیوں میں پیش کردہ مہارت کو خراج تحسین کی علامت ے۔

تصاویر، خبری مواد اور ماہرین کے اقوال

مندرجہ بالا تمام پی آر مواد اور تقریب کی تصاویر ڈاؤنلوڈ کرنے کے لیے ملاحظہ کیجیے:

http://digitalpressroom.perrier-jouet.com

برانڈ کے بارے میں مزید معلومات کے لیے ملاحظہ کیجیے http://www.perrier-jouet.com

رابطہ کیجیے: اسٹیفنی منگم – پیرے-ژوئے کمیونی کیشن ڈپارٹمنٹ

Stephanie.mingam@pernod-ricard.com – +33(0)6-27-00-24-76 / +33(0)3-26-49-69-77

ذریعء؛ شامپین پیرے – ژوئے