وڈیو: گائے لالبرت کا خلا میں پہلا شاعرانہ سماجی مشن

ماسکو، 13 اکتوبر/پی آرنیوزوائر-ایشیانیٹ/

“پانی کے لیے سرگرم عمل  ستارے اور زمین”

ایک عالمی ایونٹ کے لیے بین الاقوامی فنکار

کرک دو سولے (Cirque du Soleil) اور دی ون ڈراپ (ٹ م) (ONE DROP) کے بانی گائے لالبرت (Guy Laliberte) نے اپنے شاعرانہ سماجی مشن کے پیچھے موجود جمالیاتی خیال کو آشکار کیا ہے، جو بین الاقوامی خلائی مرکز (انٹرنیشنل اسپیس اسٹیشن) (International Space Station) (آئی ایس ایس) سے شروع کیا جائے گا۔ یہ پہلا جمالیاتی و سماجی ایونٹ ہے جو خلا سے شروع ہوگا۔

ملٹی میڈیا نیوز ریلیز دیکھنے کے لیے جائیے:

http://multivu.prnewswire.com/mnr/cirquedusoleil/40521/

“پانی کے لیے  سرگرم عمل  ستارے اور زمین” (Moving Stars and Earth for Water) کے عنوان سے یہ شاعرانہ سماجی مشن 9 اکتوبر 2009ء کو (جی ایم ٹی) دنیا بھر کے 14 شہروں میں بیک وقت منعقد ہوگا۔ 120 منٹ کے لیے دنیا ان ستاروں کو نظر جمائے دیکھے گی اور فنکاروں اور عالمی شہرت یافتہ شخصیات کے نغموں سے گونج اٹھے گی جو پانی سے اپنی وابستگی کا اظہار کریں گے اور اس انتہائی اہم قدرتی ذریعے کی اہمیت کو اجاگر کریں گے۔

پانچ براعظموں میں 14 شہر ۔۔۔۔۔ اور خلاء

یہ ایونٹ 20:00 (ای ڈی ٹی، -4 جی ایم ٹی) پر بیک وقت مونٹریال، ماسکو، سانتا مونیکا، نیو یارک شہر، جوہانسبرگ، ممبئی، مراکیش، سڈنی، ٹوکیو، ٹمپا، میکسیکو شہر، ریو ڈی جینرو، پیرس، لندن اور بین الاقوامی خلائی مرکز میں منعقد ہوگا۔

ہر شہر میں ایک “جمالیاتی لمحہ” فنکاروں اور عالمی شہرت یافتہ شخصیات کی موجودگی کو آشکار کرے گا۔ ہر شہر  پانی سے متعلق اپنے الگ موضوع کا حامل ہوگا۔ مندرجہ ذیل افراد پہلے ہی اپنی شرکت کی تصدیق کر چکے ہیں: سابق امریکی نائب صدر ایل گور، اے آر رحمن، کرک دو سولے، ڈاکٹر ڈیوڈ سوزوکی، فنیئر، فرانک دی ونی، گارو، گلبرٹو گل، گریگری کولبرٹ، ژاں لیمر، ژولی پایے، ماڈ فونٹینوئے، پیٹرک بروئل، پیٹر گبریل، پیٹر لک، شکیرا، سائمن کارپنٹیر، ٹاٹویا ایشی، ٹوٹسوکو کورویاناگی، ٹفنی اسپائٹ، یو 2، وندانا شیوا اور یان آرتھس-برٹرینڈ۔ یہ شخصیات یا تو نظم کے مختلف حصے پڑھ کر، کارکردگی کا مظاہرہ کر کے یا اپنے فنکارانہ کام کو پیش کر کے اس ایونٹ میں شرکت کریں گے۔

گائے لالبرت نے کہا کہ “گزشتہ 25 سالوں میں، دنیا بھر میں کیے گئے میرے سفر نے مجھے غیر معمولی افراد: فنکاروں، رہنماؤں اور دوستوں، سے ملاقات کا موقع دیا، اس بات نے میرے دل کی گہرائیوں کو چھو لیا کہ انہوں نے میرے جمالیاتی منصوبے میں اپنی آواز، اپنی صلاحیتوں اور اپنی تخلیقی ذہانت کا حصہ شامل کرنا قبول کیا۔ انہوں نے ایسا اس لیے کیا کیونکہ وہ پانی کے حوالے سے میرے خدشات سے متفق ہیں اور میرے اس یقین کو سمجھتے ہیں کہ فن اور جذبات کے ذریعے آپ ایک آفاقی پیغام پھیلا سکتے ہیں۔”

پانی کی ایک شاعرانہ کہانی

فن، بشمول موسیقی، رقص، بصری فنون اور فوٹوگرافی گائے لالبرت کے شاعرانہ سماجی مشن کو منسلک کرنے کے لیے دھاگے کے طور پر کام کر رہے ہیں تاکہ جذبات کے اظہار کے ذریعے ہر جگہ شعور اجاگر کیا جائے۔ ہر فنکارانہ کارکردگی میں واضح نفس مضمون شامل ہوگا جو آبی مسائل کے حوالے سے انسانی عناصرکو پیش کرے گا۔

اس خیال کا مرکز ایک شاعرانہ کہانی ہے جو گائے لالبر ت کی ذہن کی تخلیق اور بین الاقوامی طور پر تسلیم کیے گئے کینیڈین مصنف یان مارٹیل (لائف آف پائی) کی لکھی ہوئی ہے۔ یہ کہانی ٹکڑوں میں پیش کی جائے گی، ایک وقت میں ایک شہر، جسے معروف و مشہور شخصیات پڑھیں گی۔

گائے لالبرت نے کہا کہ “جب میں نے مہم 21 میں شمولیت کا فیصلہ کیا، میں جانتا تھا کہ میرے مشن کا کوئی جمالیاتی جزو ہوگا۔ میں ایک فنکار ہوں، سائنسدان نہیں، اس لیے اپنے پسندیدہ طریقے سے اپنا حصہ ڈالنا میرا فرض ہے۔ اپنی تربیت کے پہلے روز میں نے اپنے فنکارانہ طریقے پر غور شروع کیا۔ اس کا خیال کہانیوں اور بچوں کے خوابوں سے آیا۔ میں نے فیصلہ کیا کہ ہمارے عالمی ایونٹ کا جمالیاتی ڈھانچہ ایک شاعرانہ کہانی ہوگی۔ ایک فنکارانہ طریقے سے لوگوں کے دلوں کو چھو لینا میری خواہش ہے اور اگر ہم ایسا کرنے میں کامیاب ہوئے تو ہم شعور اجاگر کرنے سے کہیں آگے نتائج حاصل کریں گے۔”

جمالیاتی منصوبے میں گائے لالبرت کا کردار

بین الاقوامی خلائی مرکز میں اپنے سفر کے دوران گائے وڈیوز اور فوٹوگرافس پیش کریں گے جو تمام 14 شہروں میں ہونے والی تقاریب میں شامل کیے جائیں گے۔ یہ تصاویر ان کے زمین کے مختلف نقطہ نگاہ کو قوت بخشیں گی اور وہ ہر شہر میں سامعین کے ساتھ اپنے احساسات کو شیئر کریں گے۔

گائے نے کہا کہ “اپنی تربیت اور پرواز کی تیاریوں کے دوران میں نے دیکھا کہ بین الاقوامی خلائی برادری میں سے کئی افراد نے پانی کے حوالے سے میرے خدشات کو درست جانا اور میرے منصوبے کی حمایت کی۔ وہ میرے ارادوں کو سمجھتے تھے اور انہوں نے اس خیال سے بھی اتفاق کیا کہ جمالتی زبان کا استعمال نہ صرف اس میں دلچسپی رکھنے والی خلائی برادری بلکہ ان افراد تک رسائی کی بھی سہولت دے گی جو خلا میں جاری سرگرمیوں میں عام طور پر دلچسپی نہیں رکھتے۔ میں خلوص اور ادراک پر ان کا شکریہ ادا کرنا چاہتا ہوں۔ ان کی حمایت میرے لیے انمول ہے کیونکہ اس نے اس یقینی بنایا کہ ہم چھ ارب افراد، ایک ساتھ مل کر ایک متفقہ مقصد اور دنیا کو تبدیل کرنے کے لیے کام کریں ۔۔۔۔ ایک وقت میں ایک قدم ، ایک وقت میں ایک قطرہ۔”

ایک عالمی ویب کاسٹ

 تمام 14 تقاریب aol.com کے ساتھ عالمی شراکت کے ذریعے onedrop.org پر براہ راست دستیاب ہوں گی۔

گائے لالبرت مہم کے 21 اراکینِ عملہ کے ہمراہ سویوز ٹی ایم اے-16 خلائی جہاز کے ذریعے آئی ایس ایس کا سفر کریں گے: روسی خلانورد ماکسم سوریایف (کمانڈر) روسی وفاقی خلائی ادارہ (FSA) اور ناسا خلانورد جیفری ولیمز (فلائٹ انجینئر)۔ گائے پہلے کینیڈین نجی خلائی سیاح بن جائیں گے۔ ان کا سفر خلا میں پہلا سماجی جمالیاتی مشن ہوگا۔ جدول کے مطابق وہ 11 اکتوبر کو زمین پر واپس پہنچیں گے۔

ذریعہ: کرک دو سولے

رابطہ : تانیا اورمجوست (Tania Ormejuste)، کرک دو سولے، +1-514-723-7646، ایکسٹینشن 8335،

tania.ormejuste@cirquedusoleil.com

وڈیو: http://multivu.prnewswire.com/mnr/cirquedusoleil/40521/