فلو کا خاتمہ کرنے والا چہرے کا ماسک، وبائی مرض سے نمٹنے کے لیے تیار

ہانگ کانگ میں واقع بائیو-ٹیک کمپنی فلیجنٹ (Filligent) انفلوئنزا اے کی وبا کے میکسیکو سے عالمی سطح پر پھیلاؤ روکنے میں مدد کے لیے اینٹی-انفیکٹو بائیوماسک (BioMask)کے ذخیروں کو حرکت میں لا رہا ہے۔ بائیو ماسک چہرے کا پہلا طبی ماسک ہے جو انفلوئنزا اے کے وائرس کو ماسک سے ٹکراتے ہی لمحوں میں ختم کر دیتا ہے اور ساتھ ساتھ سانس لینے کی صلاحیت کو بھی برقرار رکھتا ہے جو اس متعدی مرضی کا سب سے زیادہ نشانہ بننے والے میدانِ عمل میں آگے آگے موجود کارکنان اور بچوں کی ضرورت ہے۔  سی ای او ملیسا ماؤبرے ڈی اربیلا نے کہا کہ “انسان دوست انجمنیں  اور حکومتیں کیونکہ میدانِ عمل میں سب سے آگے ہیں اس لیے اس کے افراد متعدی مرض کا شکار بن سکتے ہیں، خصوصاً بچوں کو یہ مرض جلد نشانہ بناتا ہے۔ اس لیے ہم اپنے وسائل کا جائزہ لے رہے ہیں تاکہ اُن کی ضروریات کو پورا کیا جا سکے۔ بائیوماسک خاص طور پر ایسی ہی صورتحال سے نمٹنے کے لیے تیار کیا گیا ہے۔”
وبائی امراض کے ماہرین کے مطابق جراثیم کش بائیوماسک جیسا چہرے کا موثر ماسک وبا کے پھیلنے کے ابتدائی مہینوں  میں مرض کا نشانہ بننے والے افراد کی تعداد ایک ملین سے گھٹا کر صرف چھ تک لا سکتا ہے۔ اب تک سور کے فلو سے پھیلنے والی اس وبا سے میکسیکو میں 81 سے زائد افراد ہلاک ہو چکے ہیں اور یہ ریاستہائے متحدہ امریکہ اور، پروازوں کے ذریعے، نیوزی لینڈ تک پھیل چکا ہے۔ اس وبا کے پھیلنے سے روکنے کا طریقہ کار وضع کرنا بہت ضروری ہے۔ فلیجنٹ کی سی ای او نے کہا کہ “اینٹی-وائرلز یا ویکسینز کی فراہمی یا ڈرگ رِزِسٹینس کی تیاری کے لیے ہمیں وقت درکار ہے۔” سی ای-سرٹیفائیڈ بائیوماسک جو 99.9 فیصد بیکٹیریا اور وائرسز کو ٹکراتے ہی ختم کر دیتاہے، سور کے فلو سے پیدا ہونے والی انفلوئنزا اے کی وبا کو روکنے کے لیے ایک طاقتور ہتھیار ہے۔
انفلوئنزا اے وائرس اگر دنوں تک نہیں تو گھنٹوں تک تو ہاتھوں اور مختلف سطحوں پر زندہ رہ سکتا ہے۔ وائرس زدہ سطحوں کو چھونے سے یہ انسانوں سے انسانوں میں بھی منتقل ہو جاتا ہے۔ خود-جراثیم کش بائیوماسک جراثیموں کے مستقل خاتمے کے ذریعے وائرس پھیلنے کے خطرے کو کم کرتا ہے۔ یہ چھونے کے بعد بدستور جراثیم سے پاک رہتا ہے اس لیے بائیوماسک اُن بچوں کے لیے انتہائی موزوں ہے، جو چہرے کا ماسک پہننے کے حوالے سے بے پروائی اور بے چینی کا اظہار کرتے ہیں۔
فلیجنٹ نے بائیوماسک کو اس طرح تیار کیا ہے کہ وہ متعدی علاقوں میں نقل و حمل کی مشکلات برداشت کر سکے۔ عام ماسکوں کی طرح سستا ہونے کے علاوہ یہ پھپوندی سے آلودہ ہونے سے محفوظ رہتا ہے اور شدید ترین موسمیاتی سختیوں، ہےجیسے نمی، حرارت یا سردی وغیرہ، کو برداشت کرنے کی بھی بھرپور صلاحیت رکھتا ہے۔ یہ فلیٹ-پیکڈ ہے اور فوری طور پر تیار بھی کیا جاسکتا ہے۔ “ہم خوردہ فروشوں اور انسان دوست انجمنوں کے ساتھ مل کر کام کر رہے ہیں تاکہ وہ بائیوماسک اور ہماری دیگر اینٹی-انفیکٹو مصنوعات جلد از جلد حاصل کریں۔”
بائیوماسک کے بارے میں
بائیوماسک “انٹیلی جنٹ فلٹریشن” ٹیکنالوجی کی بنیاد پر سائنسی انداز میں ڈیزائن اور ٹیسٹ شدہ کثیر السطحی مواد سے تیار کیا گیا ہے جس کی اندرونی ساخت میں ایک بے مثال موثر سطح موجود ہے جو زبردست اینٹی-مائیکروبائیل خصوصیات کی حامل ہے۔ یہ موثر سطح پیتھوجینز کے ٹکراتے ہی انہوں منٹوں میں شناخت کر کے پھنساتی اور پھر مار دیتی ہے۔
پیٹنٹ شدہ بائیوفرینڈ (BioFriend) (ٹی ایم)ٹیکسٹائل لیئر انسانی خلیوں کا بہروپ دھار کر پیتھوجینز کو پکڑتی ہے کیونکہ یہ عام طور پر انہی سے منسلک ہوتے ہیں، بعد ازاں ان کی سطحوں(وائرسز) اور خلیوں کی دیواروں (بیکٹیریا) کو تہ و بالا کر کے اُن کا خاتمہ کر دیتی ہے۔ کئی وائرسز، بشمول انفلوئنزا وائرسز، ایک ٹرمینل سیالک ایسڈ سے جڑے ہوتے ہیں جو انسانی خلیہ کی جھلی پر موجود رہتا ہے۔ بائیوفرینڈ (ٹی ایم) ٹیکسٹائل کا بائنڈنگ ایجنٹ انفلوئنزا وائرس پر سیالک ایسڈ کے بائنڈنگ ایکشن کا بہروپ دھارتا ہے۔
چہرے کے عام ماسکس (بشمول عام سرجیکل ماسکس اور N95) ہوا میں تیرتے ہوئے پیتھوجینز کو نہیں مارتے۔ وہ صرف ایک غیر موثر میکانیکی فلٹریشن ڈیزائن کی بنیاد پر بنے ہوتے ہیں۔ اس لیے اِن ماسکوں کے اوپر یا ان کے اندر بھی جرثومے گھنٹوں تک زندہ رہ سکتے ہیں، جو اُن  کے پھیلاؤ کے امکانات کو کہیں زیادہ بڑھا دیتے ہیں۔ سختی سے کسے ہوئے N95 فیس ماسک کے مقابلے میں بائیوماسک موثریت، آرام اور سانس لینے میں آسانی دینے کے لحاظ سے بدرجہا بہتر  ہے۔
سی ای ٹیسٹنگ عمل کے دوران بائیوماسک پر زندہ ایروسلائزڈ انفلوئنزا اے کے وائرس کا اسپرے کیا گیا جو عام چھینک کے مقابلے میں 50 گنا زیادہ مواد ہے۔ (میکسیکو کا سور فلو انفلوئنزا اے وائرس کا پھیلاؤ ہے)۔ 99.9 فیصد سے زائد وائرس ایک منٹ سے بھی کم وقت میں مار دیے گئے۔ دیگر کلیدی پیتھوجینز پر بھی ایسے ہی تجربات کیے گئے جس کے نتائج بھی یکساں رہے۔ دہنی اور جلدی کھلے ہوئے تمام راستوں پر تجربات کے سلسلے میں بائیوماسک نے انسانوں پر کسی قسم کے مضر اثرات ظاہر نہیں کیے۔ بائیوماسک ‘ISO10933: طبی آلات کا حیاتیاتی ارتقاء’ میں طے کیے گئے بین الاقوامی طور پر تسلیم شدہ معیارات کے تحت جلدی حیاتیاتی موافقت (biocompatibility) کے تحت تجربات سے گزارا گیا۔ خلیات کے لیے سائٹوٹوکسٹی، مس ہونے پر جلدی سوزش، اور مستقلاً مس ہونے کی صورت میں جلد کی حساسیت جانچنے کے لیے تجربات کیے گئے۔ جس میں کوئی سائٹوٹوکسٹی، سوزش یا حساسیت کا واقعہ مشاہدے میں نہیں آیا۔
اینٹی-مائیکروبائیل پرسنل کیئر رینج ‘بائیوفرینڈ (ٹی ایم)’ نئی مصنوعات کی سیریز میں بائیوماسک فلیجنٹ کی پہلی پروڈکٹ ہے، جو امسال جاری کی گئی۔ یورپی برادری کے ہدایت نامہ برائے طبی آلات 93/42/EEC کو تسلیم کرنے کے بعد فلیجنٹ اپنے جدید جراثیم کش بائیو ماسک کے ڈیزائن، موثریت اور تحفظ کے لیے ای یو کی سخت شرائط پر پورا اترا ہے۔
بائیوفرینڈ (ٹی ایم) کے بارے میں
2008ء میں فلیجنٹ نے ایک انقلابی ٹیکنالوجی ایجاد کی جسے بائیوفرینڈ (ٹی ایم) کہا گیا، جس سے ٹکراتے ہی وائرسز اور بیکٹیریا مرجاتے ہیں۔ بائیوفرینڈ کی سالمی ٹیکنالوجی ذیلی یا زیریں طبق جیسے مصنوعی ریشم اور سوتی پارچہ جات پر استعمال کی جا سکتی ہے۔ بائیوفرینڈ (ٹی ایم) انسانی خلیوں کا بہروپ دھار کر پیتھوجینز کو پکڑتا ہے کیونکہ یہ عام طور پر انہی سے جڑے ہوتے ہیں، بعد ازاں اُن کی سطحوں (وائرسز) اور خلیوں کی دیواروں (بیکٹیریا) کو تہ و بالا کر کے اُن کا خاتمہ کر دیتی ہے۔بائیوفرینڈ (ٹی ایم) جراثیموں کو ختم کر دیتی ہے جس میں انفلوئنزا اے (بشمول میکسیکو کے سور فلو جیسے وبائی امراض)، ہرپس سمپلیکس، رائنووائرس، عمومی بخار، خسرہ، نمونیا، SARS، تپ دق، اسٹرپٹوکوکس اور MRSA شامل ہیں۔ بائیو فرینڈ کی انٹیلی جنٹ فلٹریشن ٹیکنالوجی صرف خطرناک عناصر کو ہدف بناتی ہے اور سانس لینے کی صلاحیت اور آرام کو ممکن بناتی ہے۔ مختلف ذیلی و زیریں طبقوں کے ساتھ استعمال کرنے کے نتیجے میں جرثوموں کی وسیع اقسام کو مارنے کی صلاحیتوں کے ساتھ بائیوفرینڈ (ٹی ایم) فطری طور پر خود کو صارفی مصنوعات کی وسیع ایپلی کیشنز میں ڈھال لیتا ہے۔ بائیوفرینڈ (ٹی ایم) نہ صرف انفیکشن  کو روکتا اور اس سے تحفظ دیتا ہے بلکہ روزمرہ استعمال کی ذاتی اشیاء، جو جراثیموں اور وائرسوں کی زد میں رہتی ہیں، کو محفوظ اور صاف رکھتا ہے۔
فلیجنٹ کے بارے میں
فلیجنٹ ہانگ کانگ کی ایک بائیوٹیک کمپنی ہے جو بیماریوں کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے ڈیزائن کردہ جدید اور سستی ‘انٹیلی جنٹ فلٹریشن’ تیار کرتی ہے۔ اس کی ملکیتی ٹیکنالوجیز سالموں کی سطح پر حیاتیاتی کیمیا کے استعمال کے ذریعے ہوا، پانی اور دیگر سطحوں بشمول انسانی جلد، سے خطرناک پیتھوجینز اور کیمیائی مادوں کو انسانی جسم میں داخل ہونے سے پہلے ختم یا غیر موثر کرتی ہے۔ فلیجنٹ متعدی اور دیگر امراض سے بچاؤ کے لیے عام افراد کو سستے اور جدید تحفظ بخش آلات فراہم کرتا ہے۔ فلیجنٹ عوام کو صحت کے انتخاب کا حق دیتا ہے۔
مزید معلومات کے لیے رابطہ کیجیے:
محترمہ یوان اووئی
چیف مارکیٹنگ آفیسر
فلیجنٹ لمیٹڈ
+852-2542-2400
Joanne.ooi@filligent.com
ذریعہ: فلیجنٹ